Rooh Ka Sakoon Episode 8

 جو لان میں رکھی لکڑی کی بینچ پہ بیٹھا ہوا تھا ۔انہیں .بھی کال نہیں آئ”.

“تو چلو پھر پولیس میں رپوڑٹ کردیتے ہے خود ہی پتہ چل جاۓ گا “۔

“ن ن ن  نہیں نہیں وہ آجاۓ گی میں ان کا یہی انتظار کروگی آپ چلے جاۓ پلیز میں آپ کا پہلے ہی بہت وقت ضائعہ کرچکی ہوں “۔اوزکان صالیح نے کچھ پل اسے دیکھا پھر اپنا موبائیل جو اس کے نزدیک بینچ پہ رکھ گئ تھی اسے ُاٹھایا اور باہر کی جانب چل دیا  ملائکہ نے افسردگی سے اس آخری سہارے کو خود سے دور جاتے دیکھا پھر وہ  بھی بوجھل قدموں کے ساتھ دروازے کے پاس بنی ایک اسٹیپ پہ بیٹھ گئ۔اپنے گھٹنوں پہ سر رکھے آنے والے وقت کے لیے خود کو تیار کرنے لگی اگر خالہ نہیں آئ تو اتنے پیسے تو ہے میرے پاس کے ایک رات کے لیے ہوٹل میں روم لےلوگی پر پھر کیا کروگی, سوچ سوچ کے ملائکہ کے سر میں درد ہونے لگی امی کو اگر کچھ بتایا تو وہ تو پہلے ہی ہاڑٹ پیشنٹ ہے دو اٹیک ہوچکے ہے اگر کچھ بھی ٹینشن دی تو ۔نہیں نہیں! !!! میں امی کو کچھ نہیں بتاؤگی۔بجو سے بات کروگی۔
پھر شدید تھکان کی وجہ سے اس کی شاید آنکھ لگ گئ تھی ۔جب ہی کسی نے اسے ہلایا۔

“لڑکی ُاٹھو یہ کوئ جگہ ہے سونے کی “۔

“کسی کی آواز پہ ملائکہ ہڑبڑا کے ُاٹھی ۔

“کون کون “۔

:”میں ہوں اوزکان  یہ سینڈوچ ہے کھالو بہت دیر ہوگئ ہے اور یہ کافی بھی “۔

“ملائکہ نے اس مہربان شہزادے کو دیکھا جو اس کی بے لوث مدد کررہاتھا۔دوسری طرف اس کے دماغ میں منفی باتیں لارہاتھا۔

“کہی یہ اس میں کچھ ملا کے تو نہیں لایا اکیلی لڑکی سمجھ کے مجھے بیہوش کرکے لے گیا تو نہیں “۔ملائکہ اونچی آواز میں اردو میں بڑبڑائ۔

اینجل اس میں زہر نہیں ہے کھالوبلکہ یہ دیکھوں تم میرا والا کھالو میں تمہارا والا “۔

ملائکہ نے اوزکان کی اس بات پہ شرمندہ ہوتے ہوۓ اس سے سینڈوچ پکڑلیا وہ میرے لیے اتنا کچھ کررہا ہے میں اس پہ شک کررہی ہوں ُتف ہے تجھ پہ می می “۔

“آپ میرے لیے اتنا کچھ کررہے ہے مجھے سمجھ نہیں آرہا میں آپ کا شکریہ کیسے ادا کرو ” ۔

“ج  سب ٹھیک ہوجاۓ گا کرلینا شکریہ ایک دنڑ دے کر ٹھیک ہے”۔ملائکہ نے سر ہاں میں ہلایا  پھر خاموشی سے سینڈوچ کھانے لگی ۔پھر پانی پیا اور کھڑی ہوگئ۔

اوزکان آپ پلیز چلے جاۓ مجھے اچھا نہیں لگ رہا آپ سردی میں میری وجہ سے خواع ہورہے ہے “۔

“میں نے ابھی کیا کہا تھا میں بنا مطلب کوئ کام نہین کرتا جب مجھے جانا ہوگا مین چلا جاؤگا”۔

“آپ کی اس بات کا کیا مطلب ہے”۔

اس سے پہلے اوزکان اسے کوئ جواب دیتا کوپ کی لائٹ گھر کے اندر آنے لگی دو پولیس والے گھر کے اندر داخل ہوگۓ۔اوزکان ان کی طرف بڑھ گیا۔

“یہ مسٹر سوہیل کا گھر ہے”۔پولیس کے پوچھنے پر ملائکہ نے جواب دیا ۔

جی۔

آپ ان کی کون ہے۔

“ْمیں ان کی کزن ہوں “۔

“ہم۔معزرت چاہتے ہے آپ کے کزن اور ان کے ساتھ ان کی والدہ کی گاڑی کا بہت برا حادثہ ہواہے ان کی حالت کریٹیکل ہے آپ کو اسپتال چلنا چاہیے”۔

آگے جارہی ہے

About admin

Check Also

Thirst of Billionaire episode 2

 Shaukat finally confessed, feeling burdened by their mistreatment. “I’ve seen them,” he said. “But it’s …

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *